' وژن 2026' نے فساد میں سب کچھ کھوچکی ' نرگس نسیم' کی مکمل تعلیم کا ذمہ لیا

فساد میں سب کچھ کھوچکی 'نرگس ' بارہویں میں 62 فیصد نمبروں کے ساتھ اول درجے میں کامیابی حاصل کی ہے

نئی دہلی :  فروری کے آخری ہفتے میں میں ہوئے دہلی کے بدترین فساد میں اپنا گھربار اپنی کتابیں سب کچھ کھوچکی نرگس نسیم کو اب آگے کے تعلیمی اخراجات کی فکر نہیں کرنی ہوگی ، نرگس کی خبر منظر عام پر آنے کے بعد ہیومن ویلفیر فاونڈیشن نے نرگس کومکمل اعلیٰ تعلیم کے لیے اسکالر شپ دینے کا اعلان کیا ہے ۔ خواتین کی تعلیم اور امپاورمینٹ کے لیے کام کرنے والی  'وژن 2026' کے تحت سرگرم تنظیم  'ومن ایجوکیشن اینڈ امپاورمینٹ ٹرسٹ' نے  نرگس کی مکمل اسکالرشپ اورگائڈینس کا ذمہ لیا ہے ۔


گزشتہ دنوں  سی بی ایس ای کے بارہویں کے نتائج  آنے کے بعد نرگس نسیم کی تعلیمی جدوجہد کی کہانی میڈیا میں آئی تھی جس کا نوٹس لیتے ہوئے وژن 2026 نے بچی کی تعلیم جاری رکھنے میں دلچسپی لی ۔  نرگس نے ایسے مشکل حالات کا سامنا کرتے ہوئے بھی بارہویں میں 62 فیصد نمبروں کے ساتھ اول درجے میں کامیابی حاصل کی ہے ۔

فساد میں کی گئی آگ زنی سے تباہ نرگس کے گھر کو جماعت اسلامی ہند  نے اپنے راحت اور بازآبادکاری پروجیکٹ کے تحت مرمت کرادیا پے ۔ وژن 2026  کی جانب سے کی گئی یہ مدد اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے ۔


فسادات کے بعد متاثرین کی فوری مالی  مدد کے ساتھ ساتھ ان کی بازآبادکاری اہم کام ہے اور فاونڈیشن  فساد زدہ علاقوں میں زمینی سروے کے ذریعے مکملبازآبادکاری  کے لیے منظم ڈھنگ سے کوشش کر رہا ہے۔


فاونڈیشن کے سی ای او،  پی  کے نوفل نے بتایا کہ نرگس نسیم کی مدد کا یہ پہلا معاملہ نہیں ہے گزشتہ ماہ دہلی فساد میں مارے گئے مدثرخان کے اہل خانہ کی مالی مدد اور سبھی بچوں کی تعلیم کا اعلان کیا تھا اور سبھی بچوں کی تعلیم کے لیے اسکالر شپ کی پہلی قسط ان تک پہونچا دی  گئی ہے ، 

 

اس کے علاوہ چاند محمد نامی نوجوان جس نے مالی دشواری سے  نجات پانے کے لیے  کرونا کے مریضوں کو سنبھالنے کاکام شروع کردیا تھا فاونڈیشن اس کے اہل خانہ کی مالی مدد اور سبھی کی مکمل تعلیم کے لیے مالی تعاون دے رہا ہے ۔  

 

 

 

 

 

 

0 comments

Leave a Reply